ATUL DEPAK

'Faman afa wa a-salah fa-ajruhu ala-Allahi’ (But whoever forgives & makes reconciliation-his/her reward is due from Allah)

PERSIAN/ARABIC

ترانۂ ملی‎

چین و عرب ہمارا، ہندوستان ہمارا

مسلم ہیں ہم، وطن ہے سارا جہاں ہمارا

توحید کی امانت، سینوں میں ہے ہمارے

آساں نہیں مٹانا، نام و نشاں ہمارا

دنیا کے بتکدوں میں، پہلا وہ گھر خدا کا

ہم اس کے پاسباں ہیں، وہ پاسباں ہمارا

تیغوں کے سایے میں ہم، پل کر جواں ہوئے ہیں

خنجر ہلال کا ہے، قومی نشاں ہمارا

مغرب کی وادیوں میں، گونجی اذاں ہماری

تھمتا نہ تھا کسی سے، سیلِ رواں ہمارا

باطل سے دبنے والے، اے آسماں نہیں ہم

سو بار کر چکا ہے، تو امتحاں ہمارا

اے گلستانِ اندلُس! وہ دن ہیں یاد تجھ کو

تھا تیری ڈالیوں میں، جب آشیاں ہمارا

اے موجِ دجلہ، تو بھی پہچانتی ہے ہم کو

اب تک ہے تیرا دریا، افسانہ خواں ہمارا

اے ارضِ پاک تیری، حرمت پہ کٹ مرے ہم

ہے خوں تری رگوں میں، اب تک رواں ہمارا

سالارِ کارواں ہے، میرِ حجاز اپنا

اس نام سے ہے باقی، آرامِ جاں ہمارا

اقباؔل کا ترانہ، بانگِ درا ہے گویا

ہوتا ہے جادہ پیما، پھر کارواں ہمارا

To read this in Hindi (Devanagri) CLICK HERE

TRANSLATION

Central Asia (including China) is ours, Arabia is ours, India is ours

We are Muslims and the whole world is ours

The treasure of Tauheed (Unity) is in our hearts,

It is not easy to wipe out our name and mark.

The first house we liberated from idols is the Kabah;

We are its custodians, and it is our protector

We have grown up in the shadows of swords,

Our mascot is the crescent shaped dagger

Our Azaan (prayer calls)  have reverberated in the valleys of the west,

The force of our flow could not be stopped by anyone

O Skies! we will not be subdued by falsehood,

You have tried (our steadfasteness) a hundred times!

O Gardens of Andalusia(Spain)! Do you remember those days?

When our abode was the nest on your branches?

O, the waves of Tigris (River in Iraq)! Surely, you must be recognising us,

Your river tells our tales even to this day

O Pure soil of Makkah! We have bled and died for your honor,

Our blood flows in your veins until now

The leader of our caravan, is the Prince of Hijaz (Prophet (s))

It is his name that keeps our heart in comfort and peace.

Iqbal’s song is a clarion call

For the caravan to rise and continue the journey once more.

CREDITS

  • Allama Iqbal